کورونا وائرس: ڈاکٹر کے بعد پاکستانی نژاد برطانوی نرس اریما بھی چل بسیں

لندن: ڈاکٹر کے بعد خطرناک عالمی وبا کورونا وائرس میں مبتلا پاکستانی نژاد برطانوی نرس اریما نسرین بھی انتقال کر گئیں

برطانوی میڈیا رپورٹس کے مطابق پاکستانی نژاد برطانوی نرس اریما نسرین کا انتقال والسال مینر اسپتال میں ہوا جہاں وہ 16 برس سے نیشنل ہیلتھ سروسز (این ایچ ایس) کے لیے اپنی خدمات پیش کر رہی تھیں۔

نرس اریما نسرین تین بچوں کی ماں تھیں جن میں 23 مارچ کو کورونا وائرس کی علامات ظاہر ہوئی تھیں۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق اریما نسرین برطانیہ کی بہن کزیمہ نسرین کا کہنا ہے کہ جب اریما میں کورونا کی علامات ظاہر ہوئیں تو اس وقت وہ جسمانی طور پر صحت مند تھی، لوگ کورونا وائرس کو سنجیدہ نہیں لے رہے لیکن یہ بہت ہی خطرناک ہے کیونکہ جب اریما کو وینٹی لینٹر پر رکھا گیا تو اس وقت ان کی عمر صرف 36 برس تھی۔

کورونا کے ہاتھوں زندگی کی بازی ہارنے والی اریما کی قریبی دوست روبی اختر نے سوشل میڈیا پر اپنی دوست کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہا کہ وہ بہت پیار کرنے والی اور ملنسار لڑکی تھی۔

Leave a Reply

avatar
  Subscribe  
Notify of
Share via
Copy link
Powered by Social Snap
%d bloggers like this: